پاکستان Pakistan کی معیشت کا اس وقت بائی پاس ہو رہا ہے، وزیر خزانہ

28 ستمبر 2018

Pakistan ki maeeshat ka is waqt bayi paas ho raha hai, wazeer khazana

اسلام آباد: وفاقی وزیر خزانہ اسد عمر کا کہنا ہے کہ پاکستان Pakistan کی معیشت کا اس وقت بائی پاس ہو رہا ہے، بائی پاس کامیاب ہونے کے بعد معیشت ٹریک پر آجائے گی اور دوڑے گی۔

اسلام آباد چیمبر آف کامرس کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے اسد عمر نے کہا کہ 'نوجوان قیادت اگلے سال آنے والے بوجھ کے بارے میں سوچے'۔

پاکستان Pakistan کے دورے پر آئی ہوئی عالمی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) ٹیم سے مذاکرات کے حوالے سے اسد عمر نے کہا کہ 'یہ معمول کا حصہ ہیں'۔

ساتھ ہی انہوں نے کہا کہ 'فی الحال بیل آؤٹ پیکج لینے کا کوئی منصوبہ نہیں ہے'۔

تاہم ان کا کہنا تھا کہ 'اگر ہم نئے قرضے کے لیے آئی ایم ایف کے پاس جاتے ہیں تو یہ مذاکرات بنیاد ہوں گے'۔

واضح رہے کہ پاکستان Pakistan کو رواں سال 8 ارب ڈالر billion dollor کی مالی معاونت درکار ہے، تاہم پاکستان Pakistan نے تاحال آئی ایم ایف سے بیل آؤٹ پیکج کی درخواست نہیں کی۔

گزشتہ دنوں وفاقی وزیر خزانہ اسد عمر نے عرب نیوز کو دیئے گئے انٹرویو میں کہا تھا کہ پاکستان Pakistan کو ایسی کسی ایمرجنسی کا سامنا نہیں کہ اسے بیل آؤٹ پیکج کے لیے آئی ایم ایف کا دروازہ کھٹکھٹانا پڑے۔

ان کا کہنا تھا، 'ہم نے درآمدات نہیں روکیں اور نہ ہی مالیاتی پابندیاں لگائی ہیں'۔

تاہم وزیر خزانہ نے اس بات پر زور دیا کہ ہمیں بہتر فیصلے کرنے کی ضرورت ہے اور جلدبازی یا ایمرجنسی میں فیصلے نہیں کرنے چاہئیں۔

 68