کرپشن پر قابو پانے کیلئے احتساب کے اداروں کو مضبوط کرنے کی ضرورت ہے، صدر مملکت

17 ستمبر 2018

corruption par qaboo panay ke liye ehatasab ke idaron ko mazboot karne ki zaroorat hai, saddar mumlikat

اسلام آباد: پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس سے اپنے پہلے خطاب میں صدرِ مملکت ڈاکٹر عارف علوی Dr. Arif Alvi کا کہنا تھا کہ کرپشن پر قابو پانے کے لیے ہمیں احتساب کے اداروں کو مضبوط کرنے کی ضرورت ہے۔

پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس کا باقاعدہ آغاز تلاوت قرآن پاک سے ہوا جس کے بعد نعت رسول مقبول ﷺ پیش کی گئی اور پھر بیگم کلثوم نواز کے ایثال ثواب کے لیے فاتحہ خوانی کی گئی۔

پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس میں وزیراعظم آزاد کشمیر، چاروں صوبوں کے وزرائے اعلیٰ، تینوں مسلح افواج کے سربراہان، چیئرمین جوائنٹ چیفس آف آرمی اسٹاف اور غیر ملکی سفراء سمیت دیگر شخصیات نے شرکت کی۔

پیپلز پارٹی کے سوا تمام اپوزیشن جماعتوں نے اجلاس کی کارروائی شروع ہونے ہی اپنی نشستوں پر کھڑے ہو کر احتجاج کیا اور پارلیمنٹ کے مشترکہ سیشن سے واک آؤٹ کیا۔

اسیپکر قومی اسمبلی اسد قیصر Asad Qaiser کی جانب سے اپوزیشن کو احتجاج سے روکنے کی کوشش کی گئی تاہم اس کے باوجود اپوزیشن جماعتوں نے پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس سے واک آؤٹ کیا۔

قومیں مشکلات سے گھبرایا نہیں کرتیں ان کا مقابلہ کرتی ہیں، صدر عارف علوی

صدر مملکت عارف علوی کا کہنا تھا کہ اراکین پارلیمنٹ کا مشکور ہوں جنہوں نے مجھے اس عہدے کے لیے منتخب کیا، امید ہے کہ ساتھی اراکین میرا بھرپور ساتھ دیں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ ہمارے مسائل کی سب سے بڑی وجہ گروہی مفادات اور بے انتہا کرپشن ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہمارا سیاسی نظام مختلف وجوہات کے باعث عدم استحکام کا شکار رہا ہے۔

صدر مملکت نے کہا کہ کرپشن پر قابو پانے کے لیے احتساب کے اداروں کو مضبوط کرنے کی ضرورت ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ موجودہ حکومت نے نیا پاکستان Pakistan بنانے کا عزم کیا ہے، نئے پاکستان Pakistan کی سب سے بڑی شناخت سادگی کا فروغ اور بدعنوانی سے پاک نظام ہے، ہمیں اپنی زندگیوں میں سادگی کو اپنانا ہو گا۔

صدر عارف علوی نے کہا کہ قومیں مشکلات سے گھبرایا نہیں کرتیں ان کا مقابلہ کرتی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ حکومت وقت اور تمام جماعتوں کے لیڈران سے درخواست کرتا ہوں کہ ملک کی سمت کو درست کریں، توقع ہے کہ حکومت ہر شعبے میں واضح روڈ میپ مرتب کرے گی اور شفاف نظام حکومت بنائے گی۔

’پانی اور بجلی کے مسائل پر قابو پانے کیلئے ہمیں شجر کاری پر خصوصی توجہ دینا ہو گی اور نئے ڈیم بھی بنانا ہوں گے‘

صدر مملکت نے کہا کہ پاکستان Pakistan پر بھی موسمیاتی تبدیلیوں کے مضر اثرات مرتب ہو رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ہمارے ہاں پانی کا بے دریغ استعمال ہو رہا ہے، ہمیں پانی کو ضائع ہونے سے روکنے پر توجہ دینا ہو گی اور پانی کے بے جا استعمال پر قابو پانا ہو گا۔

ان کا کہنا تھا کہ ہمیں شجر کاری پر خصوصی توجہ دینا ہو گی اور نئے ڈیم بھی بنانا ہوں گے، حکومت کو پانی اور اس سے متعلقہ مسائل سمیت بجلی کے مسائل پر بھی توجہ دینا ہو گی۔

صدر مملکت نے کہا کہ توقع کرتا ہوں ڈیم پر ہمارے لوگ چیف جسٹس اور وزیراعظم کی اپیل پر مثبت جواب دیں گے۔

اندرونی اور بیرونی قرضوں کے پہاڑ خطرناک حد تک زیادہ ہو چکے ہیں، صدر مملکت

صدر عارف علوی کا کہنا تھا کہ ہمیں یہ بات ذہن نشین کر لینی چاہیے کہ ہم ایک مقروض قوم ہیں اور ہمیں اپنے قرض ادا کرنے کے لیے بھی قرض لینا پڑتا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ہمارے اوپر اندرونی اور بیرونی قرضوں کے پہاڑ خطرناک حد تک زیادہ ہو چکے ہیں جس پر خصوصی توجہ دینے کی ضرورت ہے۔

حکومت کا پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس دو روز کیلئے مؤخر کرنے کا فیصلہ

صدر مملکت کی جانب سے قومی اسمبلی کا معمول کا اجلاس 18 ستمبر کی سہ پہر 4 بجے اور سینیٹ کا معمول کا اجلاس 18 ستمبر کی صبح 11 بجے طلب کیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ مسلم لیگ (ن) نے سابق وزیراعظم نواز شریف Nawaz Sharif کی اہلیہ بیگم کلثوم نواز کی آخری رسومات کے باعث حکومت سے پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس اور قومی اسمبلی اجلاس آئندہ ہفتے بلانے کی درخواست کی تھی، جس پر حکومت نے پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس اور قومی و سینیٹ کا اجلاس ری شیڈول کیا تھا۔

یاد رہے کہ کینسر کے مرض میں مبتلا بیگم کلثوم نواز 11 ستمبر کو لندن میں انتقال کر گئی تھیں جن کی نماز جنازہ اور تدفین جمعہ 14 ستمبر کو لاہور میں کی گئی۔

 41