پاکستان Pakistan کی معروف میڈیا کمپنی اے آر وائی نے ورلڈ کال ٹیلی کام میں 51 فیصد لگانے اور روزگار دینے میں کوشاں

06 نومبر 2019

Salman Iqbal, President ARY Digital Network, says that he intends to invest US$55million in Pakistan to create more jobs and entertainment facilities.

اے آر وائی ڈیجیٹل نیٹ ورک کے صدر سلمان اقبال کا کہنا ہے کہ وہ مزید ملازمتوں اور تفریحی سہولیات کو پیدا کرنے کے لئے پاکستان Pakistan میں 55 ملین ڈالر کی سرمایہ کاری کا ارادہ رکھتے ہیں۔

دبئی: پاکستان Pakistan کی معروف میڈیا کمپنی ، دبئی میں مقیم اے آر وائی ڈیجیٹل نیٹ ورک ورلڈ کال ٹیلی کام لمیٹڈ (ڈبلیو ٹی ایل) میں 55 ملین امریکی ڈالر سے زیادہ کی سرمایہ کاری کرنے کا ارادہ رکھتی ہے کیونکہ اس کمپنی میں اکثریت کا حصول حاصل کرنے کے لئے تیار ہے۔

اے آر وائی مواصلات لمیٹڈ اور اے آر وائی ڈیجیٹل ایف زیڈ ایل ایل سی نے ورلڈ کال ٹیلی کام لمیٹڈ میں 51 فیصد حصص اور انتظامی کنٹرول حاصل کرنے کے ارادے کا عوامی اعلان کیا ہے۔

ورلڈ کال ٹیلی کام لمیٹڈ ایک پاکستانی ٹیلی مواصلات اور ملٹی میڈیا سروس Russia پرووائڈر ہے جو عمان Oman ی کمپنی عمان Oman ٹل کا ماتحت ادارہ ہے۔ یہ لاہور ، پاکستان Pakistan میں مقیم ہے۔

اے آر وائی ڈیجیٹل ایف زیڈ ایل ایل سی دبئی میں واقع ایک میڈیا کمپنی ہے جو اپنے ٹی وی چینلز کے ذریعہ عالمی سطح پر جنوبی ایشین ناظرین کو پورا کرتی ہے۔ کمپنی فلموں ، ٹیلی ویژن اور ریڈیو کے لئے براڈکاسٹ اور پروڈکشن سپورٹ خدمات کے کاروبار میں بھی مصروف ہے۔

آری مواصلات اور اے آر وائی ڈیجیٹل دونوں ہی اے آر وائی ڈیجیٹل نیٹ ورک کی چھتری میں آتے ہیں ، جس کی سربراہی سلمان اقبال کے صدر اور سی ای او کی حیثیت سے ہوتی ہے۔ سلمان اقبال پاکستان Pakistan سپر لیگ (پی ایس ایل) کی فرنچائز کراچی کنگز کے بھی مالک ہیں۔

بھاری سرمایہ کاری

سلامی اقبال نے گلف نیوز کو ایک بیان میں کہا ، "اے آر وائی ڈیجیٹل نیٹ ورک کمپنی میں اکثریت داؤ پر حصول اور انتظامی کنٹرول کے بعد ڈبلیو ٹی ایل میں 55 ملین امریکی ڈالر سے زیادہ کی سرمایہ کاری کا ارادہ رکھتا ہے۔"

انہوں نے مزید کہا کہ سرمایہ کاری کی بنیادی توجہ کاپیکس پر مبنی نیٹ ورک کی سرمایہ کاری اور فائبر اپ گریڈیشن ہوگی جس میں ڈبلیو ٹی ایل کو میڈیا کی کارروائیوں میں مارکیٹ لیڈر کی حیثیت سے واپس لایا جاسکے۔

مزید نوکریاں

مزید یہ کہ انہوں نے نوٹ کیا کہ اس حصول سے پاکستان Pakistan میں براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری (ایف ڈی آئی) میں اضافہ ہوگا اور روزگار کے نئے مواقع پیدا ہوں گے۔

"ہمارا ہدف پاکستان Pakistan کے میٹروپولیٹن شہروں میں کم سے کم 10 لاکھ صارفین کو حاصل کرنا ہے جو صارفین کو عالمی سطح پر غیرمستعول کسٹمر سروسز کے ساتھ حاصل کی جانے والی جدید ترین ٹکنالوجی فراہم کرتے ہیں۔

"ہمیں یقین ہے کہ اس حصول کے ذریعہ ، ٹیلی کام کی جگہ پر اے آر وائی کی طرف سے کی گئی سرمایہ کاری سے پاکستان Pakistan ٹیلی کام سیکٹر میں اپنے موجودہ پیروں کو مضبوط بنانے میں مدد فراہم کرے گا اور اسے ٹیکنالوجی کا علاقائی مرکز بننے کے قابل بنائے گا۔"

 141