سروائیول فار بلوچستان Balochistan

کھٹی میٹھی کرنیں - کرن خان

05 جولائی 2019

Servivle for Balochistan

نیٹ سرفنگ کے دوران ایک ویڈیو پر نظر پڑی یہ یہ بلوچستان Balochistan کے حالات پر بنائی گئی ڈاکومنٹری تھی ۔۔جو کہ امریکہ United States میں بنائی گئی۔۔اس میں چند امریکیوں سے یہ لوگ پوچھ رہے ہوتے ہیں کیا آپ بلوچستان Balochistan کو جانتے ہیں ؟ آگے سےلوگ لا علمی کا اظہار کر رہے ہوتے ہیں کہ ہم نہیں جانتے۔۔کچھ تو حیرت سے یہ تک پوچھتے ہیں کہ بلوچیستان ہے کیا چیز ؟؟

اس کے بعد پروگرام کیا جاتا ہے وہاں کی بلوچ کمیونٹی کے کچھ لوگوں کو انوایٹ کیا جاتا ہے ۔۔ان کو بتایا جاتا ہے کہ آپ کے بلوچستان Balochistan میں تو ظلم ہو رہا ہے۔۔یہ بلوچ بھائی بھی تشویش کا اظہار کرتے ہیں کہ ہاں ہمارے بلوچستان Balochistan پر ظلم ہوا۔۔ ان کو شاید یہ امید ہوتی ہے کہ یہ ہمدرد این جی اوز ہیں جو فنڈنگ کریں گی۔۔اور یہ اس کے بعد یہ ڈاکومنٹری یو ٹیوب پر لگا دی گئی۔۔اب ان کا کام ختم کیونکہ کام بس ہایپ کری ایٹ کرنا تھا ۔۔

ویسے دیکھا جاے تو یہ کام زیادہ مشکل تو نہیں۔۔ایسا سروے کرنا کون سامشکل کام ہے؟؟ ایسا ایک سروے پاکستانی صحافیوں کے بس سے باہر نہیں ہے۔۔اگر آپ کی عوام بلوچستان Balochistan کو نہیں جانتی تو ہماری عوام بھی امریکی ریاست Mississippi کو نہیں جانتی۔۔یقین کریں جس سے پوچھیں گے کوئی بھی نا بتا پاے گا کہ یہ آخر ہے کیا؟؟

پھر ہم ایک اجلاس کریں گے کوشش کریں گے کہ اس علاقے کے لوگوں کو بھی بلایں اور پھر ان کو بتائیں گے کہ یہ امریکہ United States کی غریب ترین کرپٹ ترین بیماریوں کی گڑھ ریاست ہے ۔۔یہاں لوگ بد حال ہیں نوکریاں نہیں تعلیم نہیں علاج معالجے کی سہولت نہیں ۔۔سول وار کے بعد سے اب تک ان کے حالات اچھے نہیں ہوے۔امریکہ United States کو اس ریاست کا زرا خیال نہیں ویسے تو بڑا سپر پاور بنتا ہے ۔ان کا حق مارا جا رہا ہے اور ان کے سب سے بڑے ہمدرد ہم ہیں۔

۔ایک mississippi ہی کیا اس کے ارد گرد ملا جلا کر کل دس سے بارہ سٹیٹس ایسی ہیں جہاں حالات کوئی خاص اچھے نہیں ہیں ۔۔بدعنوانی کا عروج کرائم ریٹ کی دن بدن بڑھتی سطح ،بے روزگاری اور اکانومی کی گرتی صورت حال ۔۔ان کا میڈیا ہمارے میڈیا کی طرح تشہیر کرے نا کرے ہم سے چھپا تھوڑی ہے۔۔

امریکہ United States کو جتنی فکر بلوچستان Balochistan کے غریبوں کی ہے اتنی اپنی ان ریاستوں کی کیوں نہیں؟؟ ان سے کہا جاے کہ جب سنبھال نہیں سکتے اتنی ریاستوں پر پنجے کس خوشی میں گاڑے ہیں تو کیا امریکہ United States مانے گا کہ اس کی دس سے بارہ ریاستیں بری طرح اگنور ہو رہی ہیں؟

ہرگز نہیں ۔۔۔!

اس کے پاس دلایل ہونگے کہ بہتر حالات ہورہے ہیں یا بات یوں نہیں یوں ہے۔۔تو الو کے پٹھوں باہر بیٹھ کر تجزیہ کرنا آسان ہوتا ہے لیکن ہر ریاست جانتی ہے کہ گراونڈ ریئلٹیز کیا ہوتی ہیں ۔۔آپ کی نام نہاد این جی اوز سنی سنائی باتوں پر یقین کرکے بین بجانا شروع کردیتے ہیں آپ کا واسطہ کیا ہے بلوچستان Balochistan سے؟ ۔

۔۔ٹھیک ہے ہمارے حالات خراب رہے کافی عرصہ لیکن وجہ کون تھا؟ تم بے غیرتوں کی جنگ تھی ہم مفت میں خوار ہوے۔۔مانی تب بھی زلیل ہوے نا مانتے تب بھی ہوتے۔۔پرائی جنگ میں ملوث ہونے کا نقصان اٹھایا ہمیں کسی ایک جگہ پر لڑنا ہوتا تب کہیں فوکس کرتے نا۔۔۔!

آرمی کو بیک وقت بہت سے محازوں پر لڑنا تھا۔۔ایک طرف انڈیا کی بد عادات نے پریشان کیا دوسری طرف تم لوگوں کی لالچ نے چین China نا لینے دیا۔۔فوج کے لیے یہ خوشی کی بات یقیناً نا تھی کہ بلوچستان Balochistan اس فیز سے گزرتا ۔ کون ذلیل ہونا چاہتا ہے۔

بلاشبہ رقبے کے لحاظ سے پاکستان Pakistan کا سب سے بڑا صوبہ لیکن نصیب کے لحاظ سے بد قسمت ثابت ہوا ۔۔ایک تو ویران ریگزار اور بنجر پہاڑ اوپر سے کوئی سردار کوئی وڈیرا ایسا نا تھا جو اپنے علاقے سے صحیح معنوں میں مخلص ہوتا ۔۔پولیٹکل لیڈر ملے تو وہ بھی ایسے جنہوں نے ہمیشہ اپنا الو سیدھا کیا۔۔کوئی ایک آدھ مخلص تھا تو اس کو زندہ نا رہنے دیا گیا۔۔۔

جمہوری حکومتیں آتیں تو ان کا اپنا رونا ختم نا ہوتا ۔ایک دوسرے کی ٹانگ کھینچنے میں لگی رہتیں اور آمریت آتی تو ان کو بیک وقت بہت سے چیلنجز کا سامنا ہوتا ۔سیٹ کرتے کرتے دور حکومت ختم ہوجاتا۔اس کے نتیجے میں ہوا یہ کہ یہ صوبہ اگنور ہوتا آیا۔۔

لیکن

اب جب چند سالوں سے یہاں فوج نے مسائل حل کرنا شروع کیے۔۔جب سفر بحالی کی طرف گامزن ہوا ۔۔جب ان کے حقوق و فرایض پر توجہ دی جا رہی ہے۔۔جب سب سے ہیوی بجٹ بلوچستان Balochistan کے لیے منظور ہوا ۔۔جب شر پسند عناصر کو خاتمہ ہونے کو آیا ۔۔تب ایک دم سے ایک گروہ کو بلوچستان Balochistan کے حقوق کی فکر ستانے لگی۔ غریب عوام کو بھڑکانا اور بے بنیاد خبریں بنا کر پھیلانا ۔۔۔یہ تاثر دیا گیا کہ فوج دشمن ہے ۔۔جس جس کا پیٹ بھرتا گیا وہ گیت گاتا گیا "یہ جو دہشت گردی ہے اس کے پیچھے وردی ہے" غلط اور من گھڑت خبریں جس قدر تیزی سے گردش کرتی ہیں سچ پر مبنی وضاحت اس شور کے نیچے دب کر رہ جاتی ہے۔

۔اور جب تک پتہ چلتا ہے کہ اصل حقایق کیا تھے تب تک کافی نقصان ہو چکا ہوتا ہے۔۔اب معاملہ چاہے مسنگ پرسنز کا ہو یا بلوچوں کے حقوق بحالی کا ۔۔ چیک پوسٹوں کا ایشو وجہ بنا یا فوج ظالم ہے ۔۔ان اعتراضات کو پالش کرکے مارکیٹ میں پھیلا دیا گیا۔۔ اب جو لوگ کبھی زندگی میں بلوچستان Balochistan نہیں گئے ان کے لیے یقین کرنا زیادہ آسان ہوتا ہے۔۔

جبکہ جو لوگ وہاں رہتے ہیں یا آتے جاتے ہیں اچھی طرح جانتے ہیں حالات بہتری کی طرف گامزن ہوتے دیکھ کر ہی تو ان قوتوں سے برداشت نا ہوا ۔۔پچھلے دنوں ڈی جی آئی ایس پی آر کی پریس بریفنگ میں انہوں نے اس معاملے پر انتہائی مفصل طریقے سے روشنی ڈالی کہ کیسی کیسی مشکلات کا سامنا ان کر کرنا پڑا اور کس کس مصیبت سے گزر کر اب حالات کو بہتر کر پاے ہیں انہوں نے کافی چینلز کے مشہور صحافیوں کو اس بریفنگ میں دعوت دی کیوں کہ ہمارے کچھ چینل ایسے ہیں ان کے ہوتے ہوے کسی دشمن کی ضرورت نہیں ہے۔

ڈی جی آئی ایس پی آر نے ہر وضاحت فیکٹس اور فگرز کے ہمراہ پیش کی تاکہ ان کی کنڈیشن کو سمجھا جاے نا کہ فسادی لوگوں کو چینل پر بلا کر نقطہ چینی شروع کردی جاے۔۔معاملہ بلوچستان Balochistan کے مفاد کا ہے ۔ بلوچوں کی کیا رائے ہےکیا وہ فوج کو دشمن سمجھتے ہیں یا نہیں؟

مسئلہ یہاں بھی ہے بلوچستان Balochistan کے لوگوں کو شعور اور تعلیم سے دور رکھا گیا ۔۔ کبھی وڈیروں اور سرداروں کے رحم وکرم پر رہے تو کبھی ٹی ٹی پی یا اس جیسی شدت پسند تنظیموں کے خوف سے ان کے رحم وکرم پر چلتے رہے ۔ان کی اپنی کوئی رائے ہی نہیں رہی۔۔تھوڑا بہت پڑھا لکھا میچیور طبقہ ہوگا جو سمجھتا ہے کہ انہیں استعمال کیا جا رہا ہے۔۔

ملک دشمن قوتوں سے بھاری فنڈنگ لینے میں ان کو زرا بھی شرمندگی نہیں ہونی ان کے شعور کا عالم کیا ہے اس بات سے اندازہ لگائیں کہ الجزیرہ چینل پر ڈاکومنٹری دیکھی کہ ایک بزرگ سردار سے جب پوچھا گیا کہ آپ پر الزام ہے کہ آپ لوگوں کی انڈیا بھاری فنڈنگ کر رہا ہے ۔۔آگےسے بزرگ کا جواب سن کر سخت شاک لگا

" ہم لے تو نہیں رہے لیکن انڈیا دینا چاہے تو موسٹ ویلکم"

ایسی بھی اپنے ہم وطنوں سے کیا دشمنی کہ آپ کافروں سے مدد لینے کو بھی تیار ہیں ۔۔ انڈیا کا ساتھ دے کر پھر تیار رہنا انجام آپ کا بھی اچھا نہیں ہونا ۔مان لیا یہ صوبہ نیگلیکٹ ہوا ۔۔ان کو جانی و مالی نقصان بھی اٹھانا پڑا ۔۔لیکن بلوچوں کو سوچنا ہوگا کہ جس نام نہاد بغاوت میں ان کو گھسیٹا جا رہا ہے اس میں ان کا فایدہ ہے یا نقصان؟ اگر پاک فوج Pakistan Army ان کی خیر خواہ نہیں ہے تو اس بات کی کیا گارنٹی ہے جن آقاوں کے اشاروں پر چل رہے ہیں وہ ان کے دوست ہیں۔۔؟ ابھی بھی وقت ہے پاک فوج Pakistan Army کے ساتھ میں آپ کہ بقا بھی ہے۔۔ خود کو ایسے ہتھکنڈوں سے بچائیں فوج کے ساتھ تعاون کریں ان سے خدمت کرواتے رہیں ۔۔یہ معمولی سی بے وقعت آرمی نہیں کہ اس کو یرغمال کرلوگے ان کو اپنا اور اپنے ملک کا دفاع بخوبی آتا ہے ۔۔حکومت کو چاہیے بلوچستان Balochistan میں سب سے زیادہ تعلیم کے ایشو پر فوکس دیں۔جب تعلیم سے شعور میں اضافہ ہوگا تب ان کو خود ہی صحیح غلط کی پہچان ہو جاے گی۔۔۔

 145