ابراج کیپٹل ایک اور پاناما ایک اور کرپشن کہانی ——

Hamza Meer

15 مئی 2019



ابراج کیپٹل ایک اور پاناما ایک اور کرپشن کہانی ——

تحریر حمزہ میر

کل رات اپنی کچھ پرانی تحریر دیکھ رہا تو اچانک ایک خبر کو دیکھا تو معلوم ہوا کہ وال سٹریٹ کے تین صحافی بھائیوں نے دلدل میں پھنسے شریف خاندان کے لیے مصیبت کا ایک اور پھاڑ کھڑا کر دیا اور نواز شریف Nawaz Sharif پر پورے دو کروڑ امریکی ڈالر کی کک بیک لینے کا الزام لگایا اور وہ بھی ایک برطانوی شہری نوید ملک نامی کاروباری شخص سے اور ملک صاحب فنڈ بھی دیتے ہیں مسلم لیگ نواز اور تحریک انصاف کو اور وزیراعظم عمران خان Imran Khan اور سابق وزیراعظم نواز شریف Nawaz Sharif کے قریبی رفقا میں شامل ہیں دراصل بقول ان صحافی لوگوں کے ابراج کیپٹل جو کے شراكت دار تھی حکومت پاکستان Pakistan کی ک الیکٹرک منصوبے میں اور چاہتی تھی کہ اب یہ پروجیکٹ شنگھای الیکٹرک کو مل جاے کیوںکہ خود تو وہ کھا چکے تھے اور عمر لودھی جو کہ پارٹنر ہیں ابراج کمپنی کہ انہوں نے اكتوبر 2015 کو ملک کو میل کی اور کہا ہمارا کام کرواو جیسے مرضی ہم نے دو کروڑ ڈالر بھی رکھ لیے ہیں دینے کہ لیے اب یہ بتاؤ کیسے دینے ہیں الیکش میں یا کاروباری طریقے سے یا فنڈنگ سے اور جب نواز شریف Nawaz Sharif ورلڈ اكنامك کانفرنس میں شرکت کے لیے گۓ تب وہاں قبلہ ملک صاحب نے ملاقات کروائی دونوں کی بقول جریدے کے اور اگلے سال شنگھای الیکٹرک کو پروجیکٹ مل گیا اگر یہ بات غلط ہے تو شنگھای الیکٹرک کو منصوبا کیسے ملا کیوں ملا ایسے سوالات جن کا جواب ابھی تک نہیں ملا

 53