خیبرپختونخوا اور بلوچستان Balochistan کے مختلف اضلاع میں بارش، پہاڑوں پر برفباری

18 فروری 2019

khyber pakhtunkhwa aur Balochistan ke mukhtalif azlaa mein barish, pahoron par brfbari

کوئٹہ/ پشاور: بلوچستان Balochistan کے مختلف اضلاع میں بارش کا سلسلہ جاری ہے جب کہ بالائی شمالی علاقوں میں پہاڑوں پر برفباری ہورہی ہے۔

کوئٹہ سمیت بلوچستان Balochistan کے بیشتر علاقوں میں گزشتہ روز سے وقفے وقفے سے بارش کا سلسلہ جاری ہے جب کہ محکمہ موسمیات نے پہاڑوں پر برفباری کا بھی امکان ظاہر کیا ہے۔

بارش کے بعد بلوچستان Balochistan میں سردی کی شدت میں اضافہ ہوگیا، وادی کوئٹہ اور زیارت میں کم سے کم درجہ حرارت منفی ایک ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا جب کہ قلات میں کم سے کم درجہ حرارت منفی 5، ژوب میں 2، تربت میں 14، پسنی اور گوادر Gawadar میں 13 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا۔

محکمہ موسمیات کے مطابق سبی میں درجہ حرارت 17، خضدار 5 اور نوکنڈی میں 12 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا۔

دوسری جانب ملکی شمالی علاقوں میں دو روز کے وقفے کے بعد دوبارہ برفباری شروع ہوگئی، ضلع استور میں برفباری کے باعث شونٹھر، منی مرگ اور قمری میں رابطہ سڑکیں بند ہوگئیں جس کی وجہ سے معمولات زندگی شدید متاثر ہیں۔

ملکہ کوہسار مری میں بھی وقفے وقفے سے برفباری جاری ہے، نتھیا گلی سمیت گلیات کے مختلف علاقوں میں رات سے برفباری جاری جہاں ڈیڑھ فٹ تک برف پڑ چکی ہے، برفباری سے گلیات کی تمام رابطہ سڑکیں بند ہوگئیں۔

لوئر دیر شہر اور گرد و نواح میں بارش ہوئی جب کہ بالائی علاقوں میں برفباری جاری ہے، اسی طرح سوات میں بارش، کالام ، مالم جبہ میں وقفے وقفے سے برفباری کا سلسلہ جاری ہے۔

آزاد کشمیر میں بھی بارش اور پہاڑوں پر برفباری کے بعد موسم مزید سرد ہوگیا، مظفر آباد شہر اور گرد و نواح میں بارش ہوئی، وادی نیلم میں اٹھ مقام میں گزشتہ رات سے برفباری جاری ہے اور اب تک 6 انچ سے زائد برف پڑچکی ہے۔

وادی نیلم، وادی گریز، وادی شونٹھر، وادی سرگن اور جاگراں میں بھی برفباری کا سلسلہ جاری ہے۔

 142